واشنگٹن: صدر ٹرمپ نے کورونا ٹاسک فورس کے سربراہ ڈاکٹر فاؤچی کی تجاویز کو مسترد کرتے ہوئے ملک بھر میں فوری طور پر تمام اسکول کھولنے کا حکم دے دیا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے تمام ریاستوں کے گورنرز کو اسکول کھولنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں اب معمولات زندگی کو آہستہ آہستہ بحال ہو جانا چاہیئے۔ اسکول بند ہونے سے تعلیمی اور لاک ڈاؤن سے معیشت کو نقصان پہنچ رہا ہے اور شہری بیروزگار ہو رہے ہیں۔

صدر ٹرمپ نے اسکول کھولنے اور معمولات زندگی کو دوبارہ بحال کرنے کا اعلان اس وقت کیا جب ایک روز قبل ہی کورونا وائرس کے انسداد کے لیے بنائی گئی ٹاسک فورس کے سربراہ اور متعدی بیماری کے ماہر ڈاکٹر اینتھونی فاؤچی نے اسکول کھولنے یا معمولات زندگی بحال کرنے میں جلد بازی کا مظاہرہ کرنے پر خبردار کیا تھا۔

یہ پہلی مرتبہ نہیں کہ صدر ٹرمپ نے کورونا وائرس سے متعلق ماہرین کی رائے کو مسترد کردیا ہو، وہ ایسٹر پر ہی لاک ڈاؤن ختم کردینا چاہتے تھے جب کہ ملیریا کے لیے استعمال ہونے والی دوا کو کورونا وائرس کا علاج بتایا تھا اور مریضوں کو جراثیم کش ڈریپ لگانے کا مضحکہ خیز مشورہ بھی دیا تھا۔

واضح رہے کہ دنیا بھر میں کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 2 لاکھ 90 ہزار ہوگئی ہے جب کہ سب سے زیادہ ہلاکتیں امریکا میں ہوئی ہیں جہاں تعداد 80 ہزار 600 سے تجاوز کرگئی ہے۔